You are here
Home > Literature

غزل : اسٹیج سے فلموں تک اور پھر اسٹیج پر

غزل اس نے چھیڑی ہے تم ساز دینا ذرا عمر رفتہ کو آواز دینا غزل ، نام ہے مکملیت کا، دو مصرعوں میں پوری بات کہنے کا ، فن کے اظہار کا اور زندگی جینے کا ۔لفظ غزل جیسے ہی سماعت سے ٹکراتا ہے فوراً کلاسیکی شعرا کے نام ذہن

کردار آرٹ” اکیڈمی اور اقبال نیازی”

جیسا کہ کہا جاتا ہے ’’ ایکشن وہ کامیاب ہوتا ہے ، جس کا ری ایکشن ہو ۔‘‘ کتنی ہی اچھی کہانی ، منظر نامہ اور مکالمہ ہو ، جب تک ہدایت کار اداکار کے اندر کردار کی روح نہ پھونک دے ، اداکاری کامیاب نہیں ہو سکتی اور نہ

یواین آئی کا قصۂ درد

اردو صحافت کی ریڑھ کی ہڈی ٹوٹ رہی ہے یا عمداًتوڑی جارہی ہے؟  اردو صحافت میں انقلاب آجانے کا شور بلند کرنے والوں کیلئے ایک اہم خبر یہ ہے کہ اردو میں خبریں فراہم کرنے والی معروف خبر رساں ایجنسی یو این آئی کومزید ایک عدد خبررساں ایجنسی ’مذاکرات‘ کاسہارا مل

کس طرح کی مہاراشٹر اردو ساہتیہ اکادمی ہمیں چاہیے؟

اردو ادب اور فکشن کی دنیا میں رحمٰن عباس کا نام تعارف کا محتاج نہیں ۔ خلاق ذہن کا مالک رحمن عباس جو کچھ محسوس کرتا ہے اسے اپنے قلم کی زد پر لے کر فکشن میں ڈھالنے کا ہنر جانتا ہے ۔ ’’ نخلستان کی تلاش ‘‘ ایک ممنوعہ محبت کی کہانی

منٹو کا ایک اور پتہ

سعادت حسن منٹو کے خطوط پر مبنی محمد اسلم پرویز کی مرتب کردہ کتاب ’’آپ کا سعادت حسن منٹو ‘‘ ’’آپ کا سعادت حسن منٹو ‘‘ کتاب میں سعادت حسن منٹو کے خطوط شامل ہیں ۔ منٹو کے خطوط کو اکٹھا کر کے ترتیب دینا اور پھر اسے کتابی شکل میں

لفظوں کے سنہری تار میں معنی کے موتی پرونے والی شاعرہ ڈاکٹر نسیم نکہت

مجموعہ کلام " مرا انتظار کرنا" کے حوالے سے شہرِ سخن میں ڈاکٹر نسیم نکہت کا اپنا ایک نام ہے مقام ہے۔یہ نام یہ مقام برسوں کی ریاضت، محبّت اور محنت کا حاصل ہے۔مشاعروں کے حوالے سے تو یہ نام اور مقام اور بھی توانا ہے۔ڈاکٹر صاحبہ نے مشاعروں کی دُنیا

دلی میں ادب کی نئی بہار رنجیت چوہان اور زمرد مغل کا مشن : جشن ِ ادب

دِلی جہاں شہر ِ ِمرزا غالب ہے وہیں شہر آبرو ئے اردو بھی ہے لیکن آزادی کے بعد سے ایک تھکن سی اس شہر کے ماتھے پر نظر آنے لگی تھی جسے کم کرنے کی تگ ود و میں گزشتہ چند برسوںکچھ ادارے سرگرم نظر آنے لگے ہیں۔ دوسری طرف

روزنامے کا سرنامہ؟

اخبار کے دفتر میں کام کرنے والوں کو اکثر اس بات کا احساس دلا دیا جاتا ہے کہ کاپیاں پریس میں جانے تک ، آخر ی لمحے میں بھی کوئی اشتہار آجائے ، تواسے رد نہیں کرنا چاہیے کیونکہ اخبار کے لیے اشتہار ات اتنی ہی اہمیت رکھتے ہیں ،

ناول ’تخم خوں‘ کی ’بلایتی‘: منفرد ناول کا عجیب و غریب کردار

صغیر رحمانی کا شمار اردو کے ساتھ ہندی ادب کے بھی معروف فکشن نگاروں میں ہوتا ہے۔یوں تو انھوں نے اردو ہی میں لکھنے پڑھنے کا آغاز کیا اور اسی زبان میں اپنی شناخت قایم کی لیکن بعض وجوہات کی بنا پر اُن کی ابتدائی دو کتابیں ہندی میں شائع

سفر مجھ کو صدائیں دے رہا ہے

نصیر احمد ناصر کا نام تعارف کا محتاج نہیں ہے ۔ ان کی ایک نظم ’’ سفر مجھ کو صدائیں دے رہا ہے ‘‘ اردو نیوز ایکسپریس کے قارئین کے لیے بطور خاص ، یوم خواتین کے موقع پر ۔ اس نظم میں نظم کے واحد متکلم مرد نے عورت کو محبت

Top