You are here
Home > Khabar Nama > قومی خبریں ایک نظر میں

قومی خبریں ایک نظر میں

اے ٹی ایم سے ۱۰۰۰۰؍روپئے نکالنے کی سہولت
ہر ہفتے ۲۴۰۰۰؍روپئے بنک سے نکالے جانے کی حد برقرار رکھنے کے ساتھ ساتھ کرنٹ اکاؤنٹ سے دستبرداری کی حد میں اضافہ کیا گیا ۔
ممبئی :ریزرو بینک آف انڈیا ( آر بی آئی) بڑی راحت پہونچاتے ہوئے اے ٹی ایم سے روزانہ رقم نکالنے کی حد کو دوگنا سے بھی زیادہ یعنی ۱۰۰۰۰؍روپئے مقرر کردیا ہے ،لیکن ہفتہ وار حد بدستو۲۴۰۰۰؍روپئے برقرار رہے گی ۔ تاہم آر بی آئی نے کرنٹ اکاؤنٹ سے رقم کی د ستبرداری کی ہفتہ وار حد میں دوگنا اضافہ کرتے ہوئے۵۰۰۰۰؍روپے سے ایک لاکھ روپےکردیا ہے ۔یہ ایسا اقدام ہے جس سے چھوٹے تاجروں کی مالی حالت مزید بہتر ہوگی ۔ ملک کے مرکزی بینک نے اپنے ایک بیان میں کہاکہ ’’اے ٹی ایم اور کرنٹ اکاؤنٹ سے رقم دستبرداریوں کی حد پر نظرثانی کی گئی ہے جس میں اضافہ بھی کیا جارہا ہے ‘‘ ۔ آر بی آئی نے یکم جنوری کو اے ٹی ایم سے رقم نکالنے کی حد کو۲۵۰۰؍ روپے یومیہ سے بڑھاکر ۴۵۰۰؍روپے کر دیا تھا ۔ اب آر بی آئی نے کہا ہے کہ ’’اے ٹی ایم سے ایک دن میں ایک کارڈ پر رقم نکالنے کی موجودہ حد ۴۵۰۰؍روپے کو بڑھاکر ۱۰۰۰۰؍روپےمقرر کی گئی ہے، لیکن بنک سےرقم نکالنے کی ہفتہ وار حد۲۴۰۰۰ ؍بدستور برقرار رہے گی ‘‘ ۔ کرنٹ اکاؤنٹ سے رقم نکالنے کی ہفتہ وار حد۵۰۰۰۰؍روپے کو دوگنا کرتے ہوئے ۱۰۰۰۰۰؍ روپے مقرر کیا گیا ہے یہ سہولت اوورڈرافٹس اور کیش کریڈٹ اکاؤنٹ پر بھی لاگو رہیں گی ۔ ۵۰۰ ؍ اور ۱۰۰۰؍ روپے کے کرنسی نوٹ کی منسوخی کے بعد آر بی آئی نے بنک سے رقم نکالنے پر حد مقرر کی تھی ۔ نوٹ بندی مہم ۵۰؍روزہ مدت ۳۰؍دسمبر کو ختم ہوگئی ہے ۔

سماج وادی پارٹی کا انتشار ۔۔۔؟
لکھنؤ:سماج وادی پارٹی داخلی انتشار کا شکار ہو گئی ہے اور باغی بیٹے اکھلیش کو سمجھانے کی کوششوں میں ناکامی پر برہم ملائم سنگھ کے جارحانہ تیور اختیار کر لیے، کہا ’’بیٹا بات نہیں مانوگے تو میں تمہارے خلاف الیکشن لڑوں گا‘‘ پارٹی کے نام اور نشان پرجاری لڑائی کو عدالت تک پہونچانے کی دھمکیاں دی جا رہی ہیں ، اکھلیش یادو پر مسلمانوں کے تعلق سے منفی رویہ اختیار کرنے کا الزام ہے ، تو دوسری جانب رام گوپال یادو پر بی جے پی کے اشاروں پر اکھلیش یادو کو بہکانے کا الزام ہے۔ سماج وادی پارٹی کے بانی اور سربراہ ملائم سنگھ یادو نے عوام سے خطاب کے دوران کہا کہ اگر بیٹے نے ان کی بات نہیں مانی ، تووہ اس کے خلاف انتخابی مقابلہ کریں گے ۔

ہندستان میں ایک فیصد سرمایہ داروں کے پاس ۵۸؍فیصد دولت
ہندستان میں آمدنی میں عدم مساوات کی بڑھتی ہوئی صور ت حال کے طورپر یہ حقیقت منظرعام پر آئی ہے کہ اس ملک کے ایک فیصد دولتمند ترین افراد قومی دولت کے ۵۸؍ فیصد حصہ کے مالک ہیں ۔

ایندھن کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کی وجہ سے افراط زر کی شرح میں اضافہ
نئی دہلی : پٹرول اور ڈیزل کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کے نتیجہ میں دسمبر ۲۰۱۶؍ میں افراط زر کی شرح ۳:۳۹؍فیصد رہی، جس کے نتیجہ میں کمی کا رجحان اور ترکاریوں کی قیمتوں میں کمی کا رجحان بھی رک گیا ہے ۔ اس کے علاوہ صنعتی اشیا کی قیمتوں میں اضافہ بھی ہوا ہے ۔ اسی وجہ سے ریزرو بینک کی جانب سے ۸؍ فروری کو اپنی پالیسی پرنظر ثانی کےاعلان میں شرح سود میں کمی کا امکان نہیں ہے ۔ ہول سیل افراط زر کی شرح نومبر میں ۳:۱۵؍فیصد رہی تھی جبکہ دسمبرمیں یہ شرح منفی۱:۰۶؍فیصد ریکارڈ کی گئی تھی ۔ کہا گیا ہے کہ ڈیزل کی قیمت میں حالیہ دنوں میں جملہ ۲۰:۲۵؍فیصد اور پٹرول کی قیمت میں۸:۵۲؍فیصد کا اضافہ کیا گیا ہے ۔ ماہ دسمبر میں بحیثیت مجموعی ایندھن اور برقی شعبہ کے افراط زر کی شرح۸:۶۵؍فیصد تک بڑھی ہے ۔ ماہ دسمبر کے دوران ایندھن کی اشیا کے علاوہ شکر ‘ آلو ‘ دالوں اور گیہوں کی قیمتوں میں بھی اضافہ درج کیا گیا ہے ۔ نومبرکے مہینے میں غذائی اجناس کے معاملہ میں افراط زر کی شرح منفی۷۰:۰؍ فیصد تھی، لیکن یہ دسمبر میں۱:۵۴؍فیصد تک پہونچ گئی ہے ۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ پٹرول اور ڈیزل پر افرا ط زر کے دباؤ کی وجہ عالمی مارکٹ میں خام تیل کی قیمتوں میں اضافہ ہے ۔

آر بی آئی گورنر ۲۰؍ جنوری کو
پی اے سی اجلاس میں حاضر ہوں گے
نئی دہلی :پارلیمانی پبلک اکاؤنٹس کمیٹی (پی اے سی) کے چیرمین کے نے کہا ہے کہ بجٹ کی تیاریوں کے پیش نظر وزارت فائنانس کے عہدیداروں کے ساتھ اجلاس کو ۱۰؍ فروری تک موخر کردیا گیا ہے ،لیکن ریزرو بینک آف انڈیا ( آر بی آئی ) کے گورنر ارجیت پٹیل مقررہ پروگرام کے مطابق ۲۰؍جنوری کو اجلاس میں حاضر ہوں گے ،جہاں ان سے نوٹوں کی منسوخی کے مسئلہ پر سوالات کیے جائیں گے ۔ پی اے سی نے پٹیل اور وزارت فائنانس کے عہدیداروں کو ۲۰؍ جنوری کو اپنے اجلاس میں حاضر رہنے کی ہدایت کی تھی۔ کمیٹی کے چیرمین تھامس نے کہا کہ ’’میرے پاس دستیاب اطلاعات کے مطابق پٹیل ۲۰؍جنوری کو اس اجلاس میں حاضر رہیں گے ۔لیکن وزارت فائنانس کے عہدیدار اس اجلاس میں نہیں رہیں گے جنھوں نے بجٹ کے عمل کے اختتام تک توسیع کی درخواست کی ہے ‘‘۔ تھامس نے یہ بیان ایک ایسے وقت دیا ہے جس سے قبل بی جے پی کے ایک رکن پارلیمنٹ نشی کانت دوبے نے جو اس کمیٹی کے رکن بھی ہیں تھامس کے نام اپنے مکتوب میں ۲۰؍جنوری کو طلب کردہ اجلاس موخر کرنے کی درخواست کی تھی ۔

کونسل انتخابات کے لیے کانگریس ،این سی پی اتحاد
ممبئی۔ مہاراشٹرا میں اپوزیشن کانگریس اور این سی پی نے۳؍فروری کو منعقد ہونے والے ۵؍ گرائوجیٹس اور ٹیچرس حلقوں سے قانون ساز کونسل کے انتخابات کے لیےباہمی اتحاد کرلیا ہے۔ صدر پردیش کانگریس اشوک چوہان نے آج بتایا کہ ان کی پارٹی گریجویٹ حلقوں امراوتی اور ناسک اور بیشتر حلقہ ناگپور سے مقابلہ کرے گی۔ جبکہ نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) اورنگ آباد ٹیچر حلقہ سے مقابلہ کرے گی۔ علاوہ ازیں کانگریس نے کوکن ٹیچرس سیٹ (نشست) پینٹ اینڈ ورکرس پارٹی کو مختص کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ مسٹر اشوک چوہان نے بتایا کہ پردیش کانگریس کمیٹی کے اجلاس میں ۲۶؍ضلع پریشدوں اور ۱۰؍میونسپل کارپوریشن کے اس بات کی حکمت عملی پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ یہ انتخابات آئندہ ماہ منعقد ہوں گے۔

Leave a Reply

fourteen + five =

Top