You are here
Home > Health > سیسے کے زہرسے کس طرح بچا جاسکتا ہے

سیسے کے زہرسے کس طرح بچا جاسکتا ہے

سیسے کا زہر جب جسم میں پھیلتاہے توخطر ناک صورت اختیار کر سکتا ہے دھات کئی مہینوں یا سال تک جسم میں جمع ہوتی رہتی ہے ۔یہاں تک کہ سیسے کی کم سے کم مقدار بھی صحت کے لئے خطرناک ثابت ہو سکتی ہے خاص طور سے چھ سال کی عمر کے اندر کے بچوں کے ،لیےسیسے کا زہر مہلک ہو سکتا ہے۔
سال ۲۰۱۵میں میگی نولڈس انڈیا میں سیسہ کی مہلک مقدار ہونے کا الزام لگایا گیا رپورٹ کے مطابق پورے ملک میں ایک سال تک خون کے نمونے اکھٹے کیے گئے جن میں سے ۲۳؍ فیصد خون کے نمونوں میں سیسے کا زہرپایا گیا۔ اکانامکس ٹائمز کے ایک مضمون کے مطابق ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے تخمینہ کے مطابق تقریباً ۴۳۰۰۰ اموات سیسے کی وجہ سے ہوئی ہیں اور اس کا زیادہ بار ترقی یافتہ ممالک پر پڑتا ہے ۔
’’ اگر کسی انسان کے اندر سیسہ کا زہر ہو تو پہچاننا مشکل ہے ۔ایسے لوگ جو صحت مند نظر آتے ہیں ان کے جسم میں بھی سیسے کی بڑی مقدار ہو سکتی ہے ۔اگر جسم میں سیسے کی مقدار بڑھ جائے تو دماغ اور مرکزی اعصابی نظام کو نقصان پہنچ سکتاہے اور انسان کوما میں جا سکتاہے موت بھی ہو سکتی ہے۔ عام طورسے سیسے کے زہر سے ہونے والی بیماری کی علامات ظاہر نہیں ہوتی یہاں تک کہ اگر خطرناک سطح تک بھی سیسہ کا زہر جسم میں پھیل جائے تب بھی۔ سندیپ واگھاڑے کہتے ہیں جو تحقیق میں شامل تھے اور ممبئی کے ایک ہسپتال کے میٹرو ہیلتھ کئیر میں ایک کنسلٹنگ پیتھالوجسٹ اور ڈاکٹر ہیں۔ کہتے ہیں کہ سیسے کی زیادہ مقدار چھوٹے بچوں میں ہوتی ہے کیونکہ کھیلتے وقت پینٹ لگی دیواروں کو چھیلتے ہیں یا پھر کھلونوں سے کھیلتے ہیں جن میں سیسہ کیء ذرات ہوتے ہیں۔
وجوہات
عام طورسے سیسے کازہر ایسے پینٹ ، مٹی ، پانی یا پھر ایسی ہوا سے پیھلتاہے جس میں سیسہ شامل ہوتاہے۔
اگر آپ کسی آٹو ریپئر شاپ میں کام کرتے ہیں یا پھر بیٹری کی مدد سے کوئی کام کرتے ہیں یا پھر گھروں کے رینوویشن کا کام کرتے ہیں نے کا کام کرتے ہیں توآپ کے کام کرنے کی جگہ بھی سیسہ پھیلنے کی وجہ بن سکتی ہے۔
علامات
جب سیسے کی بہت زیادہ مقدار جسم میں موجود ہو تب بھی اس کی علامات ظاہر نہیں ہوتیں ۔بچوں میں بڑھوتری میں رکاوٹ ۔سیکھنے کے عمل میں رکاوٹ، بھوک کی کمی ، وزن میں کمی، تھکان ، چڑچڑا پن ، قبض بہرہ پن اور الٹیاں اس مرض کی علامات ہیں۔
اوربڑوںمیں پیٹ درد ، قبض ، پپٹھوں اور جوڑوں میں درد ، دماغ کا صیحح کام نہیں کرنا یا دداشت کا کم ہو جانا اور آدمیوںمیں اسپرم کا کم ہونا یا غیر معمولی ہونا اور حاملہ عورتوں میں حمل کا گر جانا یا وقت سے پہلے بچے کی پیدائش ہونا۔
اگر آپ یا آپ کے بچے اوپر دی گئی علامات سے دوچار ہیں اور آپ سوچتے ہیں کی آپ کو سیسے کا زہر ہے تو آپ جتنی جلدی ہو سکے ڈاکٹر سے ملیے اور اگر جس ڈاکٹر سے آپ ملے ہیں اسے اس بات کا یقین ہو کہ آپ کے خون میں سیسے کا زہر ہے تو وہ آپ کو خون کے جانچ کی صلاح دے گا۔
٭ایسے ذرائع جن میں سیسہ شامل ہوتا ہے
پینٹ :بہت سارے گھروں یا اپارٹمنٹ میں جو پینٹ استعمال کیے جاتے ہیں ان میں سیسہ ہو سکتاہے۔چھوٹے بچے اگر اس پینٹ کو کھا لیں تو انہیںیہ مرض ہو سکتا ہے۔
پانی کے پائپ سیسے سے بنے پائپ جن کی مدد سے گھروں میں پانی آتا ہے ، جس سے سیسے کے ذرات پانی میں شامل ہوتے ہیں۔
عام طور سے مٹی میں سیسہ نہیں پایا جاتا ،لیکن ہائے وے کے قریب مٹی میںیا پرانے گھروںکی دیوار کے قریب کی مٹی میں سیسہ کے ذرات ہو سکتے ہیں۔
ہمیشہ اپنے بچوں کو اچھی کوالیٹی کے کھلونے دلائیں سستے اور خراب کوالیٹی کے کھلونوںمیں سیسہ ہو سکتاہے ۔
اچھی کوالیٹی کے کاسمیٹک خریدنا ضروری ہے ٹیسٹ سے ثابت ہوا ہے کہ بہت سی کاسمیٹک میں بھی سیسے کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے۔ اس سے بچنا چاہیے۔

Leave a Reply

3 × 3 =

Top